جنوبی افریقی فاسٹ بولر سوبسوبے پر اسپاٹ فکسنگ کے جرم میں8سال کی پابندی

جوہانسبرگ: جنوبی افریقہ کے گیندباز لونوابو سوتسوبے پر آٹھ سال کی پابندی عائد کی گئی ہے۔ ان پر سال 2015 میں گھریلو ٹوئنٹی -20 کرکٹ سیریز رام سلیم کرکٹ ٹورنامنٹ کے دوران بدعنوانی میں ملوث رہنے کا الزام تھا۔ سوتسوبے سی ایس اے کی اینٹی کرپشن یونٹ کے تحت بندش کا سامنا کرنے والے ساتویں کھلاڑی ہیں ۔ اینٹی کرپشن یونٹ کے جج برنارڈ اینگوپے نے معاملے کی سماعت کے بعد سوتسوبے پر پابندی کا اعلان کیا۔ معاملے کی جانچ نومبر 2015 میں شروع ہوئی تھی۔
تفتیش کاروں نے جانچ کے بعد پیش کی گئی اپنی رپورٹ میں اس بات کی تصدیق کی کہ سوتسوبے گھریلو سیریز کے دوران بدعنوانی میں ملوث تھے۔ واضح رہے کہ سوتسوبے پر میچ فکسنگ میں ملوث ہونے کے علاوہ 10 دیگر الزام عائد تھے۔ 33سالہ سوتسوبے نے اپنے اوپر عائد کردہ کرپشن کے الزامات تسلیم کر لیے ہیں اورمعافی مانگتے ہوئے کہا کہ اس وقت ان کی مالی حالت نہایت ناگفتہ بہ اور قابل رحم تھی۔ اور دباؤ میں اسپاٹ فکسنگ میں شامل ہوا۔

Title: tsotsobe handed eight year ban | In Category: کھیل  ( sports )